دہشت گردی کا سنگین خطرہ، پی ڈی ایم کا کوئٹہ جلسہ ملتوی کیا جائے:بلوچستان حکومت کی پی ڈی ایم سے اپیل

پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ نے اپنا تیسرا جلسہ پچیس اکتوبر کو کوئٹہ میں منعقد کرنے کا اعلان کیا اور اس سلسلے میں بھرپور تیاری کی جا رہی ہے، جلسے کے انعقاد سے چند روز پہلے نیکٹا کی جانب سے سیکیورٹی تھریٹ الرٹ جاری کیا گیا جس کے بعد اب بلوچستان حکومت نے اپوزیشن قیادت سے باضابطہ درخواست کر دی ہے کہ وہ عوام کے جان و مال کے تحفظ کو مد نظر رکھتے ہوئے جلسے کی تاریخ آگے بڑھا دیں، ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی نے پریس کانفرنس کی ہے اور کہا ہے جلسے کرنا اپوزیشن کا حق ہے، ہم انہیں ان کے حق سے نہیں روک رہے، پہلے بھی جلسے ہوتے آئے ہیں، آئندہ بھی ہوں گے مگر نیکٹا تھریٹ الرٹ کو نظر انداز نہیں کر سکتے، بلوچستان کے حالات سے سب واقف ہیں، دہشت گردی کی نئی لہر شروع ہوئی ہے، سیکیورٹی فورسز کو بھی نشانہ بنایا گیا ہے، ماضی میں سیاسی قیادت کو بھی نشا نہ بنایا جا چکا ہے، ان تمام حقائق کو دیکھتے ہوئے جلسہ ملتوی کر دیں، کچھ عرصے بعد حالات بہتر ہونے پر بے شک جتنے مرضی جلسے کریں۔