کورونا کے وارتیز،قوم کی لاپرواہی قیمتی جانیں نگلنے لگی

جناح اسپتال کراچی کے سابق پروفیسر آف سرجری ڈاکٹر سید وقار احمد کورونا وائرس سے انتقال کرگئے۔سربراہ جناح اسپتال ڈاکٹر سیمی جمالی کا کہنا ہے کہ عالمی وباء کورونا وائرس سے جناح اسپتال کے سابق پروفیسر آف سرجری ڈاکٹر سید وقار احمد انتقال کرگئے ہیں۔

این سی او سی کی جانب سے بار بار خطرے کی نشاندہی کے باوجود پاکستان میں کسی بھی سطح پر احتیاط نہیں برتی جا رہی جس کا خمیازہ کورونا کیسز بڑھنے اور اموات کی شرح میں اضافے کی صورت میں بھگتنا پڑے گا، اعدادوشمار بتا رہے ہیں کہ کورونا کے وار میں یکا یک تیزی آ گئی ہے اورکئی ماہ بعد ملک میں ریکارڈڈ ایکٹو کورونا کیسز کی تعداد دس ہزار سے بڑھ گئی ہے، جب کہ ماہرین کا کہنا ہے اصل تعداد اس سے کہیں زیادہ ہے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے مطابق گزشتہ روزملک بھرمیں 28 ہزار 534 ٹیسٹ کیئے گئے، جن میں سے 736 ٹیسٹ مثبت آئے، اس طرح ٹیسٹ مثبت آنے کی شرح 2 اعشاریہ 57 فیصد رہی جبکہ پاکستان بھر میں اب تک کُل 41 لاکھ 70 ہزار 270 کورونا وائرس کے ٹیسٹ کیئے جا چکے ہیں۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 10 افراد اس موذی وباء کے سامنے زندگی کی بازی ہار گئے جبکہ 462 مریض اس بیماری سے شفایاب ہو گئے۔پاکستان میں کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد 3 لاکھ 25 ہزار 480 ہو چکی ہے، جبکہ اس موذی وباء سے جاں بحق افراد کی کُل تعداد 6 ہزار 702 تک جا پہنچی ہے۔