سینیٹر رحمان ملک نے پاکستان کو فیٹف گرے لسٹ سے بچانے کے لیئے ٹرمپ کارڈ کھیل دیا

سابق وزیر داخلہ سینیٹر رحمان ملک جو ملک کے روایتی سیاسی ماحول سے ہٹ کر صرف اور صرف قومی مفادات کے معاملات کو منفرد انداز اور ریسرچ کے ذریعے اجاگر کرنے میں معروف ہیں نے پاکستان کو درپیش انتہائی اہم چیلنج پر اپنے حصے کا کردار ادا کیا ہے۔چئیرمین سینیٹ قائمہ کمیٹی داخلہ سینیٹر رحمان ملک نے اپنے ذاتی ٹویٹر سے پاکستان کو فیٹف گرے لسٹ سے نکالنے کےلئے مہم کا آغاز کیا اور ٹرمپ کارڈ کھیلتے ہوئے سب محب وطن پاکستانیوں سے مہم میں بھرپور حصہ لینے کی اپیل کی ہے۔

اپنے ٹویٹ میں انھوں نے کہا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے اپیل ہے کہ وہ پاکستان کو ایف اے ٹی ایف کی گرے لسٹ سے نکالے، اگر ڈونلڈ ٹرمپ پاکستان کو گرے لسٹ سے نکالتا ہے تو امریکی نژاد پاکستانی اسکو ووٹ دئینگے۔ انھوں نے امریکہ میں مقیم تمام پاکستانیوں سے اپیل ہے کہ وہ فیٹف سے نکلنے کیلئے اپیل مہم چلائیں اور اپیل مہم میں استدعا کیجائے کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ پاکستان کو ایف اے ٹی ایف گرے لسٹ سے نکالیں۔
سینیٹر رحمان مل نے کہا کہ امریکہ کی دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کی قربانیاں سب سے بڑھ کر ہیں، دھشتگردی کیخلاف جنگ میں پاکستان نے ستر ہزار سے زائد انسانی جانیں قربان کئے ہیں انھوں مدت سوال اٹھایا ہے کہ کیا پاکستان کی عظیم قربانیوں کا یہی صلہ ہے کہ ایف اے ٹی ایف کی گرے لسٹ میں شامل کیا گیا ہے، فیٹف گرے لسٹ سے نکالنے کیلئے سینیٹر رحمان ملک کا شروع کردہ مہم کو ٹویٹر پر خوب پذیرائی ملی ہے، فیٹف گرے لسٹ سے نکالے کے لئے مہم میں دنیا بھر سے پاکستانی بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہے ہیں، سینیٹر رحمان ملک نے اپنے ٹویٹ میں امریکی صدر، مختلف کانگریس رہنماء و فیٹف کے صدر کو ٹیگ کیا ہے۔
انھوں نے کہا ہے کہ ہر سیاسی اختلاف سے مبرا ہوکر ملکی مفاد سب پاکستانی اس مہم جوئی میں حصہ لے تاکہ پاکستان جلد از جلد ایف اے ٹی ایف کے گرے لسٹ سے نکالا جائے۔ انھوں نے ٹویٹر صارفین کو TakeoutPakfromFATFgreylist#

[email protected] اور

کے ہیش ٹیگ سے ٹویٹ کرنے کی اپیل کی ہے۔