گلگت بلتستان الیکشن، ماضی دہرایا جائے گا یا تاریخ بدلے گی

تازہ ترین صورتحال کا جائزہ لیاجائے توگلگت بلتستان انتخابات میں امیدواروں کےسیاسی جوڑ توڑ جاری ہیں ۔ماضی میں حکمراں جماعت مسلم لیگ نواز کے چار بڑے امیدوار اپنے سیاسی گھونسلے تبدیل کرتے ہوئے پی ٹی آئی کے ٹکٹ سے الیکشن لڑرہے ہیں۔ان امیدواروں میں سابق اسپیکر اسمبلی حاجی فدا محمد شاد،سابق وزیر برائے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن حاجی حیدر خان، سابق وزیر تعلیم ابراہیم ثنائی اور سابق رکن اسمبلی ڈاکٹر محمداقبال شامل ہیں ۔ن لیگ کے کچھ امیدوار بطور آزاد انتخابی عمل کاحصہ ہیں۔اس کے علاوہ بیشتر امیدوار ناراضی کے باعث اپنی سیاسی جماعتیں چھوڑ کر آزاد حیثیت سے اپنی قسمت آزمائی کررہے ہیں۔

سیاسی ماہرین کا کہناہے کہ چونکہ مرکز میں تحریک انصاف حکومت میں ہے جس کی وجہ سے ان کے جیت کے امکانات زیادہ ہیں اور یہاں کی سیاسی تاریخ بھی ایسی ہی ہے۔اب دیکھنایہ ہوگاکہ ماضی کی تاریخ کے مطابق نتائج برقرار رہتی ہیں یا تاریخ کے برعکس نتائج سامنے آتے ہیں۔